پی ٹی ائی کو بتائے بغیر سنی اتحاد کونسل نے الیکشن کمیشن کو خط لکھ کر مخصوص نشستوں کو قبول کرنے سے انکار کردیا

الیکشن کمیشن میں مخصوص نشستوں سے متعلق جاری معاملے میں یہ بات سامنے آئی ہے کہ سنی اتحاد کونسل کے سربراہ صاحبزادہ حامد رضا نے الیکشن کمیشن کو خط لکھ کر مخصوص نشستوں کو قبول کرنے سے انکار کردیا۔

الیکشن کمیشن نے سنی اتحاد کونسل کی مخصوص نشستوں سے متعلق درخواستوں کا جائزہ لیا، بیرسٹر گوہر علی خان اور صاحبزادہ حامد رضا کمیشن کے روبرو پیش ہوئے۔

این اے 15 کے نواز شریف کے خلاف انتخابی نتائج کے کیس میں تمام دلائل مکمل ہونے کے بعد الیکشن کمیشن نے کیس خارج کر دیا

پی ٹی آئی کے وکیل علی ظفر نے اعتراض اٹھاتے ہوئے کہا کہ الیکشن کمیشن نے کل تمام پارلیمانی جماعتوں کو نوٹس جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

جواب میں چیف الیکشن کمشنر نے واضح کیا کہ تمام جماعتوں کو نہیں بلایا گیا، صرف مخصوص نشستوں کے حقدار ہیں۔

علی ظفر نے دلائل دیتے ہوئے کہا کہ تمام فریق اس کیس میں ملوث نہیں ہیں، کیونکہ کمیشن کے سامنے سنی اتحاد کونسل کی جانب سے چار درخواستیں تھیں۔  انہوں نے دعویٰ کیا کہ الیکشن کمیشن نے دیگر جماعتوں کی درخواستوں کا انتظار کرنے کے لیے جان بوجھ کر ان کی درخواستوں کو زیر التوا رکھا، جس کے بعد ان کی درخواستوں پر سماعت کی جائے گی۔

انہوں نے مزید بتایا کہ تحریک انصاف سے انتخابی نشان واپس لے لیا گیا، سپریم کورٹ میں تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ انتخابی نشان کے بغیر انہیں مخصوص نشستیں الاٹ نہیں کی جائیں گی۔  تاہم الیکشن کمیشن کے حکام نے یقین دلایا کہ اگر وہ پارٹی میں شامل ہوتے ہیں تو انہیں نشستیں ملیں گی۔

جانیے ضمنی انتخابات کتنی نشستوں اور کن حلقوں میں ہو گا

عدالتی کارروائی کے دوران الیکشن کمیشن کی نمائندگی کرنے والے وکیل نے کہا کہ انتخابی نشانات کی عدم موجودگی سے مخصوص نشستوں کی الاٹمنٹ متاثر نہیں ہوگی۔  اس سے اب ان کے خدشات اور پیشین گوئیاں درست ثابت ہوئی ہیں۔

چیف الیکشن کمشنر نے انہیں یاد دلایا کہ ان کے وکیل نے پہلے سپریم کورٹ میں کہا تھا کہ اگر انتخابی نشان چھین لیے گئے تو انہیں مخصوص نشستیں نہیں دی جائیں گی۔

بیرسٹر علی ظفر نے اپنے دلائل جاری رکھتے ہوئے اس بات پر زور دیا کہ اعتراض اس بات پر ہے کہ سنی اتحاد کونسل نے مخصوص نشستوں کی فہرست فراہم نہیں کی۔  انہوں نے کہا کہ غیر معمولی حالات میں تشریح کی ضرورت ہوتی ہے اور سیاسی جماعت کی تعریف انتخابات میں اس کی شرکت سے ہوتی ہے۔

پنجاب میں نو منتخب حکومت کی سولہ رکنی کابینہ کے نام سامنے آگۓ، کابینہ میں کتنے اتحادی شامل ہے

اسلام آباد کی ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن عدالت کی طرف سے عمران خان سمیت پی ٹی آئی کے رہنماؤں کے لیے بڑا ریلیف آگیا

190 ملین پاؤنڈز ریفرنس کی سماعت میں جج ناصر جاوید رانا اور عمران خان کے درمیان مکالمہ