مسلم لیگ (ن) کا پنجاب میں رانا ثناء اللہ کو بڑا عہدہ دینے کا فیصلہ

عام انتخابات میں رانا ثناء اللہ کی شکست کے بعد مسلم لیگ (ن) کی مرکزی قیادت نے متبادل تجویز پر غور شروع کر دیا۔  اس تجویز میں تجویز کیا گیا ہے کہ اگر رانا ثناء اللہ ضمنی انتخاب میں حصہ نہ لینے کا فیصلہ کرتے ہیں تو انہیں پنجاب کا گورنر بنایا جائے۔

پاکستان تحریک انصاف نے علیمہ خان کو نیا پی ٹی آئی چیئرمین بنانے کا فیصلہ کر لیا

اس فیصلے پر عمل درآمد سے دو اہم مقاصد حاصل کیے جا سکتے ہیں۔  سب سے پہلے رانا ثناء اللہ کو ان کی خدمات کے اعتراف کے طور پر اہم عہدہ دیا جائے گا۔  دوم، وہ نامزد وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز کو حکومتی امور کو سنبھالنے میں اپنا تعاون فراہم کریں گے۔  (ن) لیگ کے رہنماؤں کو تشویش ہے کہ تحریک انصاف جیسی جماعتیں پنجاب میں مریم نواز کے لیے چیلنج بن سکتی ہیں۔

عمران خان کے خلاف تحریک عدم اعتماد کے مولانا فضل الرحمان کے بیان پر جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ کا موقف سامنے آ گیا

عمران خان سے ملاقات کے بعد اسد قیصر نے پی ٹی آئی کی طرف سے وزیراعظم کے نام کا اعلان کر دیا

کیا جے یو آئی حکومت بنانے میں ن لیگ کا ساتھ دے گی، جے یو آئی کی مرکزی کمیٹی نے فیصلہ کر لیا