پی ٹی ائی کے حمایت یافتہ ازاد امیدواروں کا خیبرپختونخوا میں کلین سویپ

عام انتخابات میں پولنگ کے بعد ووٹوں کی گنتی کا عمل تاحال جاری ہے اور خیبرپختونخوا کی صوبائی نشستوں کے نتائج کا اعلان ہونا باقی ہے۔  الیکشن کمیشن کے اہلکار مستعدی سے سرکاری نتائج فراہم کر رہے ہیں۔

پی کے 3:

خیبرپختونخوا اسمبلی کی نشست پی کے 3 سوات کے 76 پولنگ اسٹیشنز کے تازہ ترین نتائج کے مطابق آزاد امیدوار میاں شرافت علی 25 ہزار 170 ووٹ لے کر آگے ہیں جب کہ مسلم لیگ ن کے ملک جہانگیر 11 ہزار 774 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

پی کے 4:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 4 سوات سے آزاد امیدوار علی شاہ 30 ہزار 22 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جب کہ مسلم لیگ ن کے امیدوار سردار خان 12 ہزار 514 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 6:

خیبرپختونخوا کی نشست پی کے 6 سوات کے لیے مقابلہ آزاد امیدوار فضل حکیم خان نے جیتا، جنہوں نے متاثر کن 25,330 ووٹ حاصل کیے۔  پی ٹی آئی پارلیمنٹرینز کے افتخار احمد 19 ہزار 422 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 7:

پی کے 7 سوات سے آزاد امیدوار امجد علی 25 ہزار 129 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جب کہ پی ٹی آئی پی کے امیدوار حبیب علی شاہ 13 ہزار 917 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 19:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 19 سے آزاد امیدوار حمید الرحمان 23 ہزار 44 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جب کہ آزاد امیدوار خالد خان 13 ہزار 571 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 25:

پی کے 25 بونیر سے آزاد امیدوار ریاض خان 28 ہزار 490 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جب کہ جمعیت علمائے اسلام ف کے فضل غفور 12 ہزار 702 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 26:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 26 بونیر سے آزاد امیدوار سید فخر جہاں 26 ہزار 782 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ جماعت اسلامی کے ناصر علی 15 ہزار 216 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 34:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 34 بٹ گرام سے آزاد امیدوار نے 13 ہزار 501 ووٹ حاصل کیے جب کہ جمعیت علمائے اسلام کے شاہ حسین خان 11 ہزار 628 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 45:

پی کے 45 ایبٹ آباد سے آزاد امیدوار مشتاق احمد غنی شاندار کامیابی کے ساتھ سامنے آئے۔

PK-57

KPK کی نشست PK-57 مردان کی تازہ ترین تازہ کاری میں 67 پولنگ اسٹیشنوں کے نتائج سامنے آئے ہیں۔  آزاد امیدوار ظاہر شاہ 18 ہزار 466 ووٹ لے کر پہلے نمبر پر رہے۔  قریب سے پیچھے اے این پی کے احمد خان بہادر ہیں جنہوں نے 8,256 ووٹ حاصل کیے اور دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 60:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 60 مردان کے حالیہ پولنگ اسٹیشنز میں آزاد امیدوار افتخار مشوانی 21 ہزار 705 ووٹ لے کر سب سے آگے ہیں۔  قریب سے پیچھے اے این پی کے شیر افغان خان 10,443 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 63:

پی کے 63 چارسدہ سے آزاد امیدوار ارشد علی 34 ہزار 395 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے۔  اے این پی کے شکیل بشیر خان 23 ہزار 423 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 65:

پی کے 65 چارسدہ سے آزاد امیدوار فضل شکور خان 43 ہزار 103 ووٹوں کی نمایاں برتری سے کامیاب قرار پائے۔  ان کے مدمقابل جمعیت علمائے اسلام کے محمد احمد خان 18 ہزار 266 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 76:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 76 پشاور سے آزاد امیدوار سمیع اللہ خان 18 ہزار 888 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے۔  عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) کے خوشدل خان 12 ہزار 986 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 77:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 77 سے آزاد امیدوار شیر علی آفریدی متاثر کن 30,544 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے۔  جمعیت علمائے اسلام ف کے صفت اللہ 7 ہزار 615 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

پی کے 81:

خیبرپختونخوا کی صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 81 کے 36 پولنگ اسٹیشنز کے نتائج جاری کر دیے گئے۔  آزاد امیدوار قاسم علی شاہ 11 ہزار 150 ووٹ لے کر پہلے جبکہ عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) کے ارسلان خان 2 ہزار 157 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

پی کے 83:

صوبائی اسمبلی کی نشست پی کے 83 کے 57 پولنگ اسٹیشنز کے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق آزاد امیدوار مینا خان 19 ہزار 197 ووٹ لے کر آگے ہیں۔  اے این پی کی ثمر ہارون بلور 18566 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

پی کے 84:

کے پی کے کی نشست 84 کے 48 پولنگ اسٹیشنز کے نتائج بتاتے ہیں کہ آزاد امیدوار فضل اللہ اس وقت 14 ہزار 506 ووٹ لے کر برتری پر ہیں۔  اے این پی کے ملک فرہاد 4 ہزار 933 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

پی کے 111

خیبرپختونخوا کی پی کے 111 کی نشست پر تازہ ترین اپ ڈیٹ میں 101 پولنگ اسٹیشنز کے نتائج سامنے آئے ہیں۔  جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی) کے آفتاب حیدر شاہ نے 30 ہزار 379 ووٹ لے کر پہلی پوزیشن حاصل کی۔  اس کے بعد پی ٹی آئی پی کے احتشام جاوید اکبر ہیں جنہوں نے کل 25,299 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔