بھارت میں تاریخی بابری مسجد کو شہید کر کے بنائے گئے رام مندر کو گیارہ دنوں میں کتنے کروڑ روپے چندہ وصول ہوا

بھارت میں، تاریخی بابری مسجد کو منہدم کر کے اس کی جگہ رام مندر بنا دیا گیا، جس کا باضابطہ افتتاح بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے 22 جنوری 2024 کو کیا تھا۔

جیسا کہ انڈیا ٹوڈے کی رپورٹ کے مطابق، اس کے افتتاح کے بعد 11 دنوں کے اندر اندر، مندر میں 2.5 ملین ہندو زائرین کی غیر معمولی آمد دیکھی گئی ہے۔  مزید یہ کہ اس عرصے کے دوران مندر کو 110 ملین روپے کی فراخدلی رقم عطیات میں ملی ہے۔

ٹیمپل ٹرسٹ کے دفتر انچارج پرکاش گپتا نے انکشاف کیا ہے کہ چندہ مختلف ذرائع سے جمع کیا گیا ہے۔  تقریباً 80 ملین روپے عطیہ خانوں کے ذریعے عطیہ کیے گئے ہیں جبکہ 35 ملین روپے چیک اور آن لائن لین دین کے ذریعے موصول ہوئے ہیں۔  عطیہ کے عمل کو آسان بنانے کے لیے، مندر کے مرکزی علاقے میں ‘درشن پاتھ’ کے قریب حکمت عملی کے ساتھ چار بڑے عطیہ خانے رکھے گئے ہیں، جس سے یاتری آسانی سے اپنا نذرانہ جمع کر سکتے ہیں۔

سعودی حکومت کا احسن اقدام، اب زائرین غار حرا کی زیارت آرام اور سکون سے سکیں گے

ان انتظامات کے علاوہ، مندر نے 10 کمپیوٹرائزڈ کاؤنٹر بھی قائم کیے ہیں جہاں یاتری اپنا حصہ ڈال سکتے ہیں۔  14 افراد کی ایک سرشار ٹیم، جس میں 11 بینک ملازمین اور 3 مندر کے ٹرسٹ ملازمین شامل ہیں، موصول ہونے والے فنڈز کی تندہی سے گنتی اور نگرانی کرتی ہے۔  شفافیت اور جوابدہی کو یقینی بنانے کے لیے، عطیہ کے عمل میں شامل تمام اقدامات، حجاج کی پیشکش سے لے کر رقوم کی گنتی تک، سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعے احتیاط سے نگرانی کی جاتی ہے۔

متحدہ عرب امارات کا گولڈن ویزا کون سے لوگ اور کیسے حاصل کر سکتے ہے اور اس کے کیا فوائد ہیں

کویت فیملی ویزا پالیسی میں سختی، پاکستان سمیت 7 ممالک کے افراد کے لیے مشکلات میں اضافہ

کینیڈا میں سٹڈی ویزا پالیسی برائے 2024-2025

یورپی یونین کا تارکین وطن کے لیے Migration and Asylum کے نام سے نئے معاہدے پر اتفاق