توشہ خانہ کیس میں بشریٰ بی بی نے خود سے نیب کی ٹیم کو گرفتاری دے دی

توشہ خانہ کیس میں بشریٰ بی بی نے خود سے نیب کی ٹیم کو گرفتاری دے دی

 

توشہ خانہ کیس میں احتساب عدالت کے فیصلے کے بعد عمران خان کی اہلیہ بشریٰ بی بی کو حراست میں لے لیا گیا۔

یہ بات عمران خان اور بشریٰ بی بی کو 14 سال قید اور 787 ملین روپے جرمانے کی سزا کے بعد سامنے آئی ہے۔  بشریٰ بی بی نے اپنی مرضی سے خود کو اڈیالہ جیل میں قومی احتساب بیورو (نیب) کے حوالے کر دیا، جہاں وہ پہلے ہی انہیں گرفتار کرنے کے لیے موجود تھے۔

نیب کی ٹیم خاص طور پر سابق خاتون اول کی گرفتاری کے لیے بنائی گئی تھی۔  توقع ہے کہ عدالت کا تفصیلی فیصلہ جاری ہونے کے بعد نیب کی ٹیم پولیس کے ہمراہ گرفتاری کے لیے آگے بڑھے گی۔

آج کی سماعت کے دوران عمران خان عدالت میں پیش ہوئے تاہم بشریٰ بی بی غیر حاضر تھیں۔