مسلم لیگ نواز نے اپنا انتخابی منشور پیش کر دیا

مسلم لیگ نواز نے اپنا انتخابی منشور پیش کر دیا

 

مسلم لیگ نواز نے اپنے منشور کی نقاب کشائی کی ہے، جس میں کسانوں کی مدد اور تنازعات کے حل کے لیے متبادل ‘پنجائیتی نظام’ متعارف کرانے کی تجاویز کے ساتھ ساتھ موسمیاتی تبدیلی کے اثرات سے نمٹنے کے لیے اقدامات شامل ہیں۔

منشور کے حصے کے طور پر، مجوزہ پالیسیوں کے موثر نفاذ کو یقینی بنانے کے لیے ایک ‘خصوصی نگرانی اور نفاذ کونسل’ قائم کی جائے گی۔  یہ کونسل حکومت کی کارکردگی پر سہ ماہی رپورٹس تیار کرنے کی بھی ذمہ دار ہوگی۔

منشور میں چھوٹے کسانوں کو بلا سود قرضوں کی فراہمی پر روشنی ڈالی گئی ہے اور پانچ سالوں میں ایک کروڑ سے زیادہ ملازمتیں پیدا کرنے کا وعدہ کیا گیا ہے۔  مسلم لیگ ن کا مقصد بھی ہے کہ چار سال کے عرصے میں مہنگائی کو چار سے چھ فیصد تک کم کیا جائے اور پاکستان کو موسمیاتی تبدیلیوں کے اثرات سے بچانے کے لیے اقدامات پر عمل درآمد کیا جائے، جس میں پلاسٹک کے تھیلوں پر مکمل پابندی بھی شامل ہے۔

چنو نئی سوچ کو کے سلوگن کے ساتھ پاکستان پیپلز پارٹی نے انتخابی منشور جاری کر دیا

اس شعبے کے لیے مختص جی ڈی پی میں چار فیصد اضافے کے ہدف کے ساتھ تعلیمی اخراجات ایک اور کلیدی توجہ ہے۔  منشور میں آرٹیکل 62 اور 63 کو ان کی اصل حالت میں بحال کرنے سمیت آئینی، قانونی، عدالتی اور انتظامی اصلاحات کی ضرورت پر بھی زور دیا گیا ہے۔

مسلم لیگ ن کے منشور میں مقامی حکومتوں کو بااختیار بنانے پر زور دیا گیا ہے تاکہ مقامی آمدنی میں اضافہ ہو اور ہر سطح پر نوجوانوں کی نمائندگی کو یقینی بنایا جا سکے۔  مزید برآں، پارٹی کا مقصد پانچ سالوں کے اندر 60 بلین ڈالر کا سالانہ برآمدی ہدف حاصل کرنا ہے، اس کے ساتھ ساتھ تین سال کے اندر معاشی ترقی کی شرح چھ فیصد اور غربت میں 25 فیصد کمی لانا ہے۔

مزید برآں، منشور میں بجلی کی پیداوار میں 15,000 میگاواٹ اضافہ اور بجلی کے بلوں میں 20 سے 30 فیصد کمی کے منصوبے شامل ہیں۔  ان تجاویز کا مقصد ملک کی توانائی کی ضروریات کو پورا کرنا اور عام لوگوں کو ریلیف فراہم کرنا ہے۔

مسلم لیگ (ن) کے منشور کے خارجہ پالیسی کے حصے میں، جس کا عنوان ‘سرحدوں کے پار پرامن تعلقات کو فروغ دینا’ ہے، میں پڑوسی ممالک اور عالمی برادری کے ساتھ مثبت تعلقات کو فروغ دینے کے مضبوط عزم پر زور دیا گیا ہے۔  منشور چین کو ایک اہم پارٹنر کے طور پر ترجیح دیتا ہے، نئے PEC منصوبوں کی تیزی سے تکمیل کو اجاگر کرتا ہے۔

پولنگ سٹیشنز کو کس بنیاد پر حساس یا انتہائی حساس قرار دیا جاتا ہے

بھارت کے حوالے سے منشور کا مقصد علاقائی امن، اقتصادی ترقی اور باہمی احترام پر مبنی تعلقات قائم کرنا ہے۔  مزید برآں، یہ خطے میں امن کے فروغ کے لیے افغانستان کے ساتھ مشترکہ کوششوں پر زور دیتا ہے۔

‘پاکستان سب کا’ کے عنوان سے منشور میں ‘اتحاد اور تنوع’ کے باب کے تحت اقلیتی برادریوں کی عبادت گاہوں، اداروں اور اثاثوں کی حفاظت کا واضح عزم کیا گیا ہے۔

پاکستان مسلم لیگ نواز کی منشور سازی کمیٹی کے سربراہ عرفان صدیقی نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ منشور ایک پرعزم جماعت کی جانب سے ایک مستعد کوشش ہے۔  بدقسمتی سے، اصلاحاتی عمل نے اس کی تیاری میں تاخیر کی۔

مزید برآں، منشور میں پارٹی کی طرف سے کیے گئے وعدوں کو پورا کرنے میں احتساب اور شفافیت کو یقینی بنانے کے لیے ماضی کی کارکردگی کا جائزہ بھی شامل ہے۔

آئندہ انتخابات کی سیکیورٹی کے لیے پنجاب بھر میں 5 فروری کو ہی فوج تعینات کرنے کا فیصلہ

8 فروری تک ملک بھر میں انٹرنیٹ سروس کی بندش پر سندھ ہائی کورٹ کا بڑا حکم آگیا

مسلم لیگ (ن) حکومت میں آنے کے بعد کس کام کو ترجیح دے گی شہباز شریف نے بتا دیا