پاکستان مسلم لیگ (ن) نے ملک کو درپیش معاشی چیلنجز سے نمٹنے کے لیے معاشی پلان بنا لیا

پاکستان مسلم لیگ (ن)
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

پاکستان مسلم لیگ (ن) نے ملک کو درپیش معاشی چیلنجز سے نمٹنے کے لیے معاشی پلان بنا لیا

 

پاکستان مسلم لیگ (ن)
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

 

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کی قیادت میں ایک اہم مشاورتی اجلاس کے دوران اقتصادی ماہرین نے شرح نمو میں اضافہ، ٹیکس اصلاحات پر عمل درآمد، توانائی کے بحران کو حل کرنے اور بجلی اور گیس کی قیمتوں میں کمی جیسے اہم امور پر تبادلہ خیال کیا۔

اجلاس میں سابق وزیراعظم اور پاکستان مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف نے بھی شرکت کی، جہاں ملک کو درپیش معاشی چیلنجز سے نمٹنے کے لیے مختلف تجاویز اور اصلاحات پر غور کیا گیا۔

ذرائع نے انکشاف کیا ہے کہ اجلاس ملک کی بحالی اور عوام کے لیے مہنگائی کے خاتمے کے لیے معاشی منصوبے کو حتمی شکل دینے کے ساتھ اختتام پذیر ہوا۔  اس منصوبے میں شرح نمو میں خاطر خواہ اضافہ، ٹیکس اصلاحات، توانائی کے بحران کو حل کرنا اور بجلی اور گیس کی قیمتوں میں کمی شامل ہے۔

مزید برآں، اجلاس کے دوران زراعت، صنعت اور آئی ٹی کی ترقی کے لیے مراعات پر مبنی پیکیج تیار کیا گیا۔  نوجوانوں کے لیے سالانہ روزگار کے مواقع اور ہنرمندی کی ترقی کو یقینی بنانے کے لیے پالیسی نکات بھی مرتب کیے گئے۔

پیکج میں زرعی مقاصد کے لیے خصوصی رعایت پر شمسی توانائی کی فراہمی اور گھریلو صارفین کے لیے بجلی کی فراہمی میں اہم رعایتیں بھی شامل ہیں۔  مزید برآں، تعلیم، صحت اور بنیادی ڈھانچے کے بڑے منصوبوں کے لیے ترجیحات کا تعین کیا گیا۔

مزید برآں، اجلاس میں قومی ترقی کو تیز کرنے کے لیے مجموعی اقتصادی سرگرمیوں میں بتدریج اضافے پر زور دیا گیا۔  اقتصادی منصوبہ مختلف شعبوں کے ماہرین کی تجاویز کی بنیاد پر مرتب کیا گیا تھا۔