اسلام آباد کے تین حلقوں کی اسکروٹنی مکمل،جانیے کل کتنے امیدواروں نے کاغذات جمع کروائے اور کتنے امیدواروں کے کاغذات مسترد ہوئے

اسلام آباد کے تین حلقوں
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

اسلام آباد کے تین حلقوں کی اسکروٹنی مکمل،جانیے کل کتنے امیدواروں نے کاغذات جمع کروائے اور کتنے امیدواروں کے کاغذات مسترد ہوئے

 

اسلام آباد کے تین حلقوں
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

اسلام آباد کے تین حلقوں کے لیے کل 209 افراد نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ۔  ان میں سے 116 امیدواروں کے کاغذات منظور ہوئے جبکہ 93 امیدواروں کے کاغذات مسترد ہوئے۔

تینوں حلقوں سے پاکستان تحریک انصاف کے رہنما شعیب شاہین کے کاغذات نامزدگی مسترد کر دیے گئے۔  تاہم خواجہ سرا امیدوار نایاب علی کے کاغذات منظور کر لیے گئے۔

گزشتہ روز ملک کے دیگر حصوں کی طرح اسلام آباد میں بھی کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال کا آخری دن تھا۔  اسلام آباد میں قومی اسمبلی کے تین حلقوں کے لیے مجموعی طور پر 209 امیدواروں نے کاغذات جمع کرائے۔  ان میں سے 116 امیدواروں نے منظوری حاصل کی جب کہ 93 امیدواروں کو مسترد کر دیا گیا۔

این اے 48 سے 61 کے لیے 39 کاغذات منظور، 22 مسترد ہوئے۔  واضح رہے کہ این اے 48 سے سابق ڈپٹی میئر چوہدری رفعت، ڈاکٹر طارق فضل چوہدری، راجہ خرم نواز، مصطفی نواز کھوکھر اور پاکستان تحریک انصاف کے سید علی بخاری کے کاغذات منظور کر لیے گئے تھے۔

پاکستان مسلم لیگ سے وابستہ شیخ انصر عزیز کے کاغذات نامزدگی بھی منظور کر لیے گئے۔  تاہم این اے 48 کے لیے پی ٹی آئی کے شعیب شاہین اور جماعت اسلامی کے امیدوار کاشف چوہدری کے کاغذات نامزدگی مسترد کر دیے گئے۔

این اے 47 میں کل 75 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔  ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسر نے 36 کاغذات کی منظوری دی جبکہ 39 مسترد کر دیے گئے۔

این اے 47 سے چوہدری رفعت، ڈاکٹر طارق فضل چوہدری، مسلم لیگ (ن) کے ذیشان نقوی، آزاد امیدوار راجہ خرم نواز، پی ٹی آئی رہنما بابر اعوان، استحکام پاکستان پارٹی کے عامر کیانی، آزاد امیدوار مصطفی نواز کھوکھر، خواجہ سراؤں کے امیدوار نایاب اور دیگر شامل ہیں۔  علی نے ان کے کاغذات نامزدگی منظور کر لیے۔

این اے 47 سے شعیب شاہین کے کاغذات نامزدگی مسترد، جماعت اسلامی کے امیدوار عبدالعزیز کو بھی مسترد ہونے کا سامنا کرنا پڑا۔

این اے 46 میں کل 73 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔  ڈسٹرکٹ ریٹرننگ آفیسر نے 41 کاغذات نامزدگی منظور، 32 مسترد کر دیئے۔

پیپلز پارٹی کے رہنما راجہ عمران اشرف، مسلم لیگ (ن) کی جانب سے رہنما ذیشان نقوی اور انجم عقیل خان، خواجہ سرا برادری کے امیدوار نایاب علی، عامر محمود کیانی، ڈاکٹر بابر اعوان، میاں اسلم کے کاغذات نامزدگی جمع ہوئے۔

جماعت اسلامی کی طرف سے اور مرکزی مسلم لیگ سے چوہدری شفیق الرحمان کو منظور کیا گیا۔  تاہم پی ٹی آئی رہنما شعیب شاہین کے کاغذات نامزدگی مسترد کر دیے گئے۔