خیبرپختونخوا حکومت کا جیلوں میں قیدیوں کے لیے انقلابی اقدام

خیبرپختونخوا حکومت
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

خیبرپختونخوا حکومت کا جیلوں میں قیدیوں کے لیے انقلابی اقدام

 

خیبرپختونخوا حکومت
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

 

خیبرپختونخوا حکومت نے صوبے بھر کی جیلوں میں قیدیوں کو بینک اکاؤنٹس کھولنے کا موقع فراہم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔  آئی جی جیل خانہ جات خیبرپختونخوا عثمان محسود کے مطابق، یہ منظوری ویلفیئر فنڈ رولز 2023 کے تحت دی گئی ہے۔ یہ پہلی بار ہے کہ قیدیوں کے اہل خانہ کی کفالت کے لیے قوانین قائم کیے گئے ہیں، اب بینک ان اکاؤنٹس کو کھولنے میں سہولت فراہم کر رہے ہیں۔  اس وقت آف خیبر سے مذاکرات جاری ہیں۔

عثمان محسود نے وضاحت کی کہ قیدی جیل کے اندر کام کرکے اپنے اہل خانہ کی مالی معاونت کرنے کی اہلیت رکھتے ہیں۔  قیدیوں کی کمائی ہوئی اجرت میں سے 10 فیصد حکومت کو، 30 فیصد قیدیوں کو خود دی جائے گی اور باقی 60 فیصد فلاحی فنڈ میں جمع کرائی جائے گی۔

مزید برآں، انہوں نے کہا کہ جیلوں میں قیدیوں کو چھوٹی فیکٹریوں میں کام کرنے کا موقع ملے گا جو قالین، فرنیچر اور چمڑے کا سامان تیار کرتی ہیں۔  مزید برآں، وہ پی سی اوز اور کینٹینوں میں بھی کام کر سکیں گے۔