پنجاب کی نگران حکومت کا زبردست اقدام چار بڑے منصوبوں کا اعلان

پنجاب کی نگران حکومت
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

پنجاب کی نگران حکومت کا زبردست اقدام چار بڑے منصوبوں کا اعلان

 

پنجاب کی نگران حکومت
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

 

عام انتخابات کی جاری تیاریوں کے علاوہ پنجاب کی نگران حکومت نے صوبائی دارالحکومت میں چار نئے بڑے منصوبوں کا اعلان کیا ہے۔  ان منصوبوں کا مقصد ٹریفک کی بھیڑ کو دور کرنا اور شہر میں گاڑیوں کے بہاؤ کو بہتر بنانا ہے۔

نگران پنجاب حکومت کی نگرانی میں ان میگا پراجیکٹس کی ذمہ داری لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (ایل ڈی اے) اور سنٹرل بزنس ڈسٹرکٹ (سی بی ڈی) پنجاب کو تفویض کی جائے گی۔  ایل ڈی اے تین منصوبوں کے لیے ذمہ دار ہو گا، جبکہ سی بی ڈی پنجاب ایک منصوبے کو سنبھالے گا۔

پہلا منصوبہ گڑھی شاہو میں ٹریفک جنکشن کی بحالی پر توجہ مرکوز کرتا ہے، جبکہ دوسرے منصوبے میں کریم بلاک ٹریفک سگنل پر ایک انڈر پاس کی تعمیر شامل ہے۔  تیسرے منصوبے کا مقصد شمالی لاہور میں داتا نگر فلائی اوور کی تعمیر نو کرنا ہے۔  اس کے علاوہ برکت مارکیٹ میں ایک انڈر پاس بھی تعمیر کرنے کا منصوبہ ہے۔

ذرائع کے مطابق نیسپاک نے ان چاروں پراجیکٹس کا ڈیزائن پہلے ہی تیار کر لیا ہے اور اگلے ماہ کے اندر کام شروع ہونے کی امید ہے۔

مزید برآں نگران پنجاب حکومت نے شہر کے مستقبل کے منصوبوں کو بھی اپنے ایجنڈے میں شامل کیا ہے۔  پی سی ون اور ڈیزائن آنے والی حکومت کے لیے تیار کیے جائیں گے، ترقیاتی منصوبوں کی ہموار منتقلی اور تسلسل کو یقینی بنایا جائے گا۔

میٹرو لائنوں کی توسیع مستقبل کے منصوبوں میں سے ایک ہے، اور اس منصوبے کے لیے PC-1 پہلے ہی شروع کیا جا چکا ہے۔  مزید برآں، ایلیویٹڈ ایکسپریس وے کے لیے نظرثانی شدہ PC-1، جو پہلے شہباز حکومت نے شروع کیا تھا، بھی تیار کیا جائے گا۔  مزید برآں، دو نئی میٹرو لائنیں، یعنی بلیو لائن اور پرپل لائن، تعمیر کی جائیں گی، اور ان کے روٹس اور تخمینہ لاگت کو حتمی شکل دی جائے گی۔