جانیۓ وفاقی دارالحکومت میں قومی اسمبلی کی تین نشستوں کے لیے کتنے سو امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کروا دیۓ

وفاقی دارالحکومت میں قومی اسمبلی کی تین نشستوں
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

جانیۓ وفاقی دارالحکومت میں قومی اسمبلی کی تین نشستوں کے لیے کتنے سو امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کروا دیۓ

 

وفاقی دارالحکومت میں قومی اسمبلی کی تین نشستوں
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

 

وفاقی دارالحکومت میں قومی اسمبلی کی تین نشستوں کے لیے انتخابات میں حصہ لینے کے لیے کل 148 افراد نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔

این اے 46 سے 45، این اے 47 سے 56 اور این اے 48 سے 47 کے حلقوں کے لیے امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔

پی ٹی آئی کی نمائندگی کرنے والے شعیب شاہین نے تینوں حلقوں سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔  پی ٹی آئی سے تعلق رکھنے والے عامر مغل نے بھی اپنے بیٹے کی جانب سے این اے 46 اور 47 کے لیے کاغذات جمع کرائے ہیں۔

پی ٹی آئی کے رکن سید مصطفی کاظمی نے بھی کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔  پی ٹی آئی کے ایک اور امیدوار عامر شیخ نے این اے 47 کے لیے کاغذات جمع کرائے ہیں۔

انتخابی ٹکٹوں کی تقسیم شہباز شریف اور مریم نواز اپنے من پسند امیدواروں کو ٹکٹ دلوانے کے لیے سر گرم

مسلم لیگ کے کے رفعت چوہدری نے این اے 48 سے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیئے۔  مسلم لیگ ن کے رہنما اور سابق ڈپٹی میئر ذیشان نقوی نے بھی این اے 47 کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔

ایم کیو ایم کی نمائندگی کرنے والے سید ندیم منصور نے این اے 47 سے کاغذات نامزدگی جمع کرادیے۔  اس کے علاوہ اے این پی، جے یو آئی ف اور عوامی ورکرز پارٹی نے بھی کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں۔

استحکام پاکستان پارٹی کے امیدوار کاغذات نامزدگی جمع کرانے پہنچے تو انہیں بتایا گیا کہ ڈیڈ لائن گزر گئی ہے اور کل واپس آنے کو کہا گیا۔

الیکشن میں خواجہ سرا بھی پیچھے نہ رہے جانیے کس حلقے سے کاغذات نامزدگی جمع کروائے