نیشنل ٹی ٹونٹی کے سنسنی خیز فائنل مقابلے میں کراچی وائٹس کی فتح

نیشنل ٹی ٹونٹی کے سنسنی خیز فائنل مقابلے
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

نیشنل ٹی ٹونٹی کے سنسنی خیز فائنل مقابلے میں کراچی وائٹس کی فتح

نیشنل ٹی ٹونٹی کے سنسنی خیز فائنل مقابلے
فوٹو بشکریہ گوگل امیجز

 

نیشنل اسٹیڈیم کراچی میں نیشنل ٹی ٹونٹی کے سنسنی خیز فائنل مقابلے میں ایبٹ آباد کے کپتان یاسر شاہ نے ٹاس جیت کر پہلے فیلڈنگ کا فیصلہ کیا۔  کراچی وائٹس نے کریز پر اترتے ہوئے 20 اوورز میں 9 وکٹوں کے نقصان پر 155 رنز بنائے۔

کراچی وائٹس کے خرم منظور نے 53 کے شاندار اسکور کے ساتھ اپنی شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے عمیر یوسف کے شاندار 36 اور دانش عزیز کے 22 رنز کی شاندار اننگز کھیلی۔

ہدف کے تعاقب میں ایبٹ آباد کے اوپنرز اپنی ٹیم کو مضبوط بنیاد فراہم کرنے میں ناکام رہے۔  سجاد علی اور فخر زمان 19 رنز کی شراکت کے بعد آؤٹ ہوئے۔

ایبٹ آباد کی پوری ٹیم بہادری سے لڑی لیکن ناکام رہی، مقررہ 20 اوورز میں 9 وکٹوں کے نقصان پر 146 رنز بنا سکی۔  اعتزاز حبیب نے لچک کا مظاہرہ کرتے ہوئے 26 گیندوں پر 43 رنز کی نمایاں اننگز کھیلی جبکہ فیاض خان صرف 9 گیندوں پر 23 رنز بنا کر ناقابل شکست رہے۔

کراچی وائٹس کے شاہنواز دھانی زبردست قوت ثابت ہوئے، انہوں نے 3 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا، انور علی، آفتاب ابراہیم اور دانش عزیز نے 2،2 وکٹیں حاصل کیں۔

ٹورنامنٹ کی فاتح ٹیم کو 50 لاکھ روپے کی انعامی رقم کے ساتھ ایک پر وقار ٹرافی سے نوازا گیا جبکہ رنر اپ ٹیم کو 25 لاکھ روپے دیے گئے۔  ٹورنامنٹ کے بہترین کھلاڑی افتخار احمد کو 250,000 روپے کا انعام دیا گیا۔

صاحبزادہ فرحان کو ٹورنامنٹ کے بہترین بلے باز، شہاب خان کو بہترین باؤلر اور سجاد علی جونیئر کو بہترین وکٹ کیپر قرار دیا گیا، ہر ایک کو 250,000 روپے کا انعام دیا گیا۔  فائنل میں میچ کے بہترین کھلاڑی شاہنواز دھانی کو تعریفی ٹوکن کے طور پر 50 ہزار روپے سے نوازا گیا۔