غزہ میں اسرائیلی فوجی اپنی حکومت کی نااہلی کی وجہ سے مہلک بیماریورں کا شکار ہونے لگے

غزہ میں اسرائیلی فوجی اپنی حکومت کی نااہلی کی وجہ سے مہلک بیماریورں کا شکار ہونے لگے

 

 

اسرائیلی اخبار کی رپورٹ کے مطابق، غزہ جنگ میں لڑنے والے بہت سے فوجی ہاضمے کی بیماریوں کا شکار ہونے لگ۔

اخبار کا دعویٰ ہے کہ بہت سے فوجیوں کو جنگ کے دوران دی جانے والی ناقص معیاری خوراک اور ذخیرہ کرنے کی ناکافی صورتحال کے نتیجے میں مہلک شگیلا بیکٹیریا کا شکار ہو گئے ہیں۔  اس کے نتیجے میں اسرائیلی فوجیوں کو تیز بخار، پیچش اور پیٹ کی بیماریوں کا سامنا ہے۔

اس بیماری میں مبتلا متعدد فوجیوں کو اسرائیل کے ہسپتالوں میں بھیج دیا گیا ہے۔ایک اسرائیلی اخبار کے مطابق تنازع کے آغاز سے ہی اسرائیلی باشندے اپنی فوج کا پیٹ پال رہے ہیں۔

اسرائیلی طبی ماہرین کا دعویٰ ہے کہ بیمار فوجیوں کو شیگیلا انفیکشن ہے، یہ ایک انتہائی متعدی جراثیم ہے جو فوجیوں کو جلدی بیمار کر رہا ہے۔تاہم، اسرائیلی فوج کی بمباری نے پہلے ہی تباہ حال غزہ کی آبادی کو اور بھی زیادہ مشکلات کا سامنا کر دیا ہے۔

اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کی تنظیم UNOCHA کا کہنا ہے کہ ہیضہ اور جلد کی بیماریاں ان بہت سے انفیکشنز میں سے ہیں جو پورے جنوبی غزہ میں بڑے پیمانے پر پھیل رہے ہیں۔  ایک شخص سے دوسرے میں انفیکشن کی منتقلی کی حالتیں بھی بنائی گئی ہیں۔